نیپرا کی 12 پاور پلانٹس کے ٹیرف میں کمی کی منظوری

ٹیرف میں کمی کے تحت پلانٹس کی بقیہ زندگی تک 150 ارب  روپے کی بچت ہوگی۔

 اسلام آباد: نیپرا نے 355 میگاواٹ بجلی کی مجموعی گنجائش رکھنے والے2006 کی قابل تجدید پاور پالیسی کے تحت بننے والے   07 بگاس، 03 ونڈ اور 02 سولر  پاور پلانٹس کے ٹیرف میں کمی کی منظوری دے دی۔

سینٹرل پاور پرچیزنگ ایجنسی (سی پی پی اے-جی) نے ان 12   پاور پلانٹس کے ٹیرف ایڈجسٹمنٹ  میں نظر ثانی کے لئے نیپرا کو درخواستیں دی تھیں، اتھارٹی نے قواعد و ضوابط کے تحت درخواستوں کو تسلیم کیا اور 03 مارچ 2021 کو اس معاملے پر عوامی  سماعت کی۔ اتھارٹی نے سی پی پی اے۔ جی کی درخواستوں پر فیصلہ جاری کیا ہے۔

فیصلے کے تحت  اتھارٹی نے  بگاس پاور پلانٹس کی  ریڑن آن ایکویٹی 17 سے کم کر کے 12 فیصد، ونڈ کے3   پاور پلانٹس میں سے 1  کا ریڑن آن ایکویٹی 18 سے 13 اور 2 کا 17 سےکم کر کے  13 فیصد، سولر کے پاور پلانٹس کی  ریڑن آن ایکویٹی 17 سے کم کر کے 13 فیصد کر دی ہے،  ونڈ پاور پلانٹس کےآپریشن اینڈ مینٹی ننس کی لاگت کی  مد میں 20 فیصد، سولر پاور پلانٹس کےآپریشن اینڈ مینٹی ننس کی لاگت کی مد میں 15 فیصد اور بگاس پاور پلانٹس کے آپریشن اینڈ مینٹی ننس  کی لاگت کی مد میں 10 فیصد کمی کی گئی ہے۔ بگاس اور ونڈ کے پاور پلانٹس کے انشورنس کو 1 فیصد سے کم کر کہ 0.7 فیصد جبکہ سولر پاور پلانٹس کے انشورنس کو 1 فیصد سے کم کر کہ 0.5  فیصد کر دیا گیا ہے، ٹیرف میں کمی کے تحت پلانٹس کی بقیہ زندگی تک 150 ارب  روپے کی بچت ہوگی۔

اس سے قبل  اتھارٹی نے 12 تھرمل پاور پلانٹس کے ٹیرف میں بھی کمی کی منظوری دی تھی جس سے 182 ارب روپے کی بچت متوقع ہے۔اس طرح دونوں فیصلوں کے مطابق تقریبا 332 ارب روپے کی بچت متوقع ہے۔

About Express News

Avatar

Check Also

کیا کرونا ویکسین کی 2 خوراکیں ناکافی ہوں گی؟ –

واشنگٹن: امریکی فارما سیوٹیکل کمپنی فائزر کا کہنا ہے کہ ایک سال کے اندر کرونا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے