8 اپریل کو لانگ مارچ کا اعلان، تعلیمی ادارے بند رکھنے کا فیصلہ مسترد

نجی تعلیمی اداروں نے این سی او سی کی جانب سے تعلیمی ادارے مزید بند رکھنے کا فیصلہ مسترد کرتے ہوئے 8 اپریل کو ڈی چوک تک لانگ مارچ کا اعلان کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز آل پاکستان پرائیویٹ اسکولز اینڈ کالجز ایسوسی ایشن کا ہنگامی اجلاس ملک ابرار حسین کی صدارت میں ہوا۔

ملک ابرار حسین کا اس موقع پر کہنا تھا کہ تمام تعلیمی ادارے 12 اپریل سے کھولنے کی اجازت دی جائے بصورت دیگر مطالبات کی منظوری تک ڈی چوک میں دھرنا دیا جائے گا جو مطالبات کی منظوری تک جاری رہے گا۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں 8 اپریل کو ڈی چوک تک لانگ مارچ کی تیاریوں کا جائزہ بھی لیا گیا۔

ملک ابرار حسین نے مزید کہا کہ مڈل اور پرائمری تعلیمی اداروں کو عید تک بند رکھنے کا فیصلہ غیرمنطقی ہے ۔

دوسری جانب نجی اسکولز ایسوسی ایشن نے منگل کو ڈی چوک میں احتجاجی مظاہرہ کیا اور 12 اپریل سے 50 فیصد حاضری کے ساتھ تعلیمی ادارے کھولنے کا اعلان کردیا۔

مظاہرے میں مختلف تنظیموں نے شرکت کی اور کورونا کے باعث بند تعلیمی ادارے کھولنے کا مطالبہ کیا۔

ذرائع کے مطابق مظاہرے کی قیادت ڈاکٹر افضل بابر نے کی۔

شرکاء نے پلے کارڈز اور بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر اسکولوں کو کھولنے کے مطالبات درج تھے ۔

واضح رہےکہ مظاہرین نے حکومت کے خلاف نعرے بازی بھی کی۔

About Bol News

Avatar

Check Also

کراچی : کورونا، ضلع وسطی کے تین سب ڈویژن میں مائیکرو لاک ڈاون – Pakistan

کراچی میں کوروناوائرس کی روک تھام کے لیے ضلعی انتظامیہ کےاقدامات جاری ہیں۔ ضلع وسطی …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے